Poetry 4 U

Poetry Web

وہ ٹوٹتے ہوئے رشتوں کا حسن آخر تھا

February 23, 2017 Abul Kalam Azad Poetry Comments Off on وہ ٹوٹتے ہوئے رشتوں کا حسن آخر تھا

وہ ٹوٹتے ہوئے رشتوں کا حسن آخر تھا   وہ ٹوٹتے ہوئے رشتوں کا حسن آخر تھا کہ چپ سی لگ گئی دونوں کو بات کرتے ہوئے

Read More

Kyun Asir-E-Gesu-E-Kham-Dar-E-Qatil Ho Gaya

February 23, 2017 Abul Kalam Azad Poetry Comments Off on Kyun Asir-E-Gesu-E-Kham-Dar-E-Qatil Ho Gaya

Kyun Asir-E-Gesu-E-Kham-Dar-E-Qatil Ho Gaya Kyun Asir-E-Gesu-E-Kham-Dar-E-Qatil Ho Gaya Hae Kya Baithe-Bithae Tujhko Ai Dil Ho Gaya Har Bagula Dasht Ka Laila-E-Mahmil Ho Gaya Dil Ka Har Arman Fida-E-Dast-E-Qatil Ho Gaya Usne Talwaren Lagain Aise Kuchh Andaz Se Intizar Us Gul Ka Is Darja Kya Gulzar Men Nur Aakhir Dida-E-Nargis Ka Zail Ho Gaya Ye Bhi […]

Read More

In shoKH hasinon ki ada aur hi kuchh hai

February 23, 2017 Abul Kalam Azad Poetry Comments Off on In shoKH hasinon ki ada aur hi kuchh hai

In shoKH hasinon ki ada aur hi kuchh hai In Shokh Hasinon Ki Ada Aur Hi Kuchh Hai Aur Inki Adaon Men Maza Aur Hi Kuchh Hai Ye Dil Hai Magar Dil Men Basa Aur Hi Kuchh Hai Kah Do Mujhe Kya Tumne Suna Aur Hi Kuchh Hai Dil Aaina Hai Jalwa-Numa Aur Hi Kuchh […]

Read More

ان شوخ حسینوں کی ادا اور ہی کچھ ہے

February 23, 2017 Abul Kalam Azad Poetry Comments Off on ان شوخ حسینوں کی ادا اور ہی کچھ ہے

ان شوخ حسینوں کی ادا اور ہی کچھ ہے ان شوخ حسینوں کی ادا اور ہی کچھ ہے اور ان کی اداؤں میں مزا اور ہی کچھ ہے یہ دل ہے مگر دل میں بسا اور ہی کچھ ہے دل آئینہ ہے جلوہ نما اور ہی کچھ ہے ہم آپ کی محفل میں نہ آنے […]

Read More

کیوں اسیر گیسوئے خم دار قاتل ہو گیا

February 23, 2017 Abul Kalam Azad Poetry Comments Off on کیوں اسیر گیسوئے خم دار قاتل ہو گیا

کیوں اسیر گیسوئے خم دار قاتل ہو گیا کیوں اسیر گیسوئے خم دار قاتل ہو گیا ہائے کیا بیٹھے بٹھائے تجھ کو اے دل ہو گیا کوئی نالاں کوئی گریاں کوئی بسمل ہو گیا اس کے اٹھتے ہی دگرگوں رنگ محفل ہو گیا انتظار اس گل کا اس درجہ کیا گل زار میں نور آخر […]

Read More